16

اسلام آباد ہائیکورٹ نے سابق چیف جسٹس ثاقب نثار آڈیو کلپ کیس کا فیصلہ محفوظ کر لیا۔

اسلام آباد ہائی کورٹ (آئی ایچ سی) نے جمعہ کو سابق چیف جسٹس آف پاکستان (سی جے پی) ثاقب نثار کی مبینہ آڈیو کلپ سے متعلق کیس کا فیصلہ محفوظ کر لیا۔

سماعت کے دوران درخواست گزار صلاح الدین ایڈووکیٹ، اٹارنی جنرل آف پاکستان خالد جاوید خان اور پاکستان بار کونسل کے رکن حسن پاشا عدالت میں پیش ہوئے۔

اے جی پی نے دلیل دی کہ عدالتی تاریخ نے ثابت کیا ہے کہ صحیح آدمی کو ہمیشہ تنقید کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔

واضح رہے کہ وائرل ہونے والی آڈیو کلپ میں جسٹس (ر) ثاقب نثار نے مبینہ طور پر کسی نامعلوم شخص کو پاکستان مسلم لیگ نواز (پی ایم ایل این) کے سپریمو نواز شریف اور ان کی صاحبزادی مریم نواز کو سزا سنانے کی ہدایات جاری کی تھیں۔

جسٹس (ر) ثاقب نثار نے کلپ کو من گھڑت اور جھوٹ پر مبنی قرار دیا۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ میں نے اس معاملے پر کبھی کسی سے فون پر بات نہیں کی۔

انہوں نے کہا کہ میری جان بوجھ کر کردار کشی کرنے کے لیے ایسی باتیں کی جا رہی ہیں۔

.

Source link

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں