3

کمال خان کے انتقال پر ملال پر سیاسی اور سماجی تنظیموں کے علاوہ شیعوں کے سبھی چھوٹے بڑے علمائے کرام کا بھی اظہارے تعزیت ۔۔ مولانا حسن علی راجانی‎‎

نئی دہلی : مورخہ 14 جنوری / مولانا حسن علی راجانی نے کہا کہ مجھے تعزیتی پیغام دینے میں بھی ایک تکلیف درد محسوس ہو رہا ہیکہ دنیائے صحافت میں ہماری اور پورے بھارت واسیوں کی صحیح نمائینگی کرنے والے این ڈی ٹی وی کے ستون کمال خان کا انتقال ہو گیا ہے جو  قوم کا بہت بڑا خسارہ ہے ۔ مولانا حسن۔علی راجانی نے کہا کہ کمال خان کے انتقال پر ملال پر سیاسی اور سماجی تنظیموں کے علاوہ شیعوں کے سبھی چھوٹے بڑے علمائے کرام کا بھی اظہارے تعزیت ۔۔ مولانا حسن علی راجانی نے کہا کہ ہم ہندوستان اور ہندوستان کے باہر ان کی کوئی بھی خبر جس کی وہ رپورٹینگ روچی دیدی کے ساتھ کرتے ہوئے دیکھتے تھے تو خبر پوری ہی دیکھتے تھے اور ان کی اور روچی دیدی کی رپورٹینگ میں لکھنو کی اردو زبان کی میٹھاس اور نرمی اور حق گوئی بالکل نمایا نظر آتی تھی ۔ مولانا حسن علی نے کہا کہ ہم ان کے انتقال پر گہرے رنج و غم کا اظہار کرتے ہیں اور ان کے غم میں ہم برابر کے شریک ہیں اور خدا ان کو جنت میں اعلی مقام عنایت فرمائیں اور خدا پسماندگان کو صبر جمیل عطا فرمائیں آمین

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں