27

‘کاؤنٹی کرکٹ کھیلنے سے ہمیں بین الاقوامی کرکٹ میں مدد ملے گی’ حارث رؤف

لیڈز: پاکستان کے دائیں ہاتھ کے اسپیڈسٹر حارث رؤف نے برطانیہ میں کاؤنٹی کرکٹ کھیلنے کا اپنا تجربہ شیئر کیا اور دعویٰ کیا کہ اس سے انہیں بین الاقوامی کرکٹ میں مدد ملے گی۔

حارث نے یہاں اس رپورٹر کے ساتھ ایک خصوصی انٹرویو میں کاؤنٹی کرکٹ میں اپنی شرکت پر تبصرہ کیا اور دعویٰ کیا کہ انہوں نے مختلف کنڈیشنز میں کھیل کر قیمتی تجربہ حاصل کیا جس سے انہیں بین الاقوامی میچوں میں فائدہ ہوگا۔

“انگلینڈ کا دورہ ایک شاندار تجربہ تھا۔ کاؤنٹی کرکٹ تھوڑا مشکل ہے لیکن اس سے سیکھنے کو بہت کچھ ہے،‘‘ حارث نے کہا۔

انہوں نے کہا کہ ان حالات میں یہاں ڈیوکس گیند کو کنٹرول کرنا قدرے مشکل ہے لیکن ایک بار پھر میں نے اس سے بہت کچھ سیکھا ہے جو یقینی طور پر بین الاقوامی کرکٹ میں مددگار ثابت ہوگا۔

حارث نے ملتان کے چلچلاتی موسم میں ویسٹ انڈیز کے خلاف گرین شرٹس کے ساتھ اگلی اسائنمنٹ کے حوالے سے مزید کہا کہ ایک پروفیشنل کرکٹر ہونے کے ناطے ایسے چیلنجز کے لیے تیار رہنا ہوگا۔

“پیشہ ور کرکٹرز ہونے کے ناطے ہمیں ایسے چیلنجز کے لیے تیار رہنا ہوگا۔ ہم اپنے ملک کے لیے کھیل رہے ہیں لہٰذا ہم موسم کی پرواہ کیے بغیر میدان میں اپنی بہترین کارکردگی کا مظاہرہ کریں گے۔‘‘

دوسری جانب شاداب نے بھی ملتان کی شدید گرمی میں ویسٹ انڈیز کے خلاف کھیلنے کے چیلنج کے حوالے سے اپنے ریمارکس پر حارث کو یہ کہہ کر سیکنڈل کیا کہ ہمیں اس کی عادت ڈالنی ہوگی۔

شاداب نے کہا کہ ملتان کی گرمی سے کوئی ڈر نہیں، کوئی شک نہیں کہ گرمی ہے لیکن آپ کو اس کی عادت ڈالنی ہوگی۔

شاداب نے انجری سے صحت یاب ہونے کے حوالے سے مزید تبصرہ کیا اور انکشاف کیا کہ وہ آنے والی سیریز کے لیے مکمل طور پر تیار ہونے کا دعویٰ کرتے ہوئے یہاں سفر کرنے سے پہلے کافی دباؤ میں تھے۔

“جب میں یہاں آیا تو میں تھوڑا سا دباؤ میں تھا۔ میں نے پی ایس ایل کے بعد یہاں کھیلا، میرا مقصد سیریز سے پہلے پریکٹس کرنا تھا اور میں اس کے لیے پوری طرح تیار ہوں،‘‘ شاداب نے دعویٰ کیا۔

“یہ ایک مشکل حالت تھی لیکن میں نے اس سے بہت لطف اٹھایا۔ ہماری توجہ اس وقت ویسٹ انڈیز کی سیریز پر ہے اور ہم ایک اچھی سیریز کھیلنے کی کوشش کریں گے،‘‘ انہوں نے کہا۔

یہاں یہ بات قابل ذکر ہے کہ شاداب اور حارث جاری کاؤنٹی سیزن میں شرکت کے بعد برطانیہ سے روانہ ہوچکے ہیں۔ دونوں کرکٹرز ویسٹ انڈیز کے خلاف ہوم ون ڈے سیریز کے لیے حال ہی میں شروع ہونے والے تربیتی کیمپ میں شرکت کے لیے آج پاکستان پہنچیں گے۔

پڑھیں: ‘یہ کھیل کا ایک حصہ ہے’ بابر نے ونڈیز ون ڈے کے لیے جدوجہد کرنے والے رضوان کی حمایت کی۔



Source link

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں