18

بلوچستان میں سیکیورٹی فورسز کے کیمپوں پر حملے میں ایک فوجی شہید، 4 دہشت گرد مارے گئے۔

تصویر – رائٹرز
تصویر – رائٹرز
  • آئی ایس پی آر کے مطابق دہشت گردوں نے دو مقامات سے سیکیورٹی فورسز کے کیمپ میں داخل ہونے کی کوشش کی۔
  • آئی ایس پی آر کا کہنا ہے کہ دہشت گردوں کو بھاری جانی نقصان پہنچاتے ہوئے دونوں حملوں کو کامیابی سے پسپا کر دیا گیا ہے۔
  • بیان میں کہا گیا ہے کہ فوجیوں کے بروقت جواب نے دہشت گردی کی کوششوں کو ناکام بنا دیا۔

بدھ کو انٹر سروس پبلک ریلیشن (آئی ایس پی آر) کے ایک بیان میں کہا گیا کہ بلوچستان میں سیکیورٹی فورسز کے کیمپوں پر حملے کی کوشش کے دوران ایک فوجی نے جام شہادت نوش کیا، جب کہ چار دہشت گرد مارے گئے۔

فوج کے میڈیا ونگ کے مطابق حملے کے دوران ایک فوجی زخمی بھی ہوا۔

بیان میں مزید کہا گیا کہ دہشت گردوں نے بدھ کی شام بلوچستان میں پنجگور اور نوشکی کے دو مقامات پر سیکیورٹی فورسز کے کیمپوں پر حملہ کرنے کی کوشش کی۔ تاہم دہشت گردوں کو بھاری جانی نقصان پہنچاتے ہوئے دونوں حملوں کو کامیابی سے پسپا کر دیا گیا۔

آئی ایس پی آر نے بتایا کہ پنجگور میں دہشت گردوں نے دو مقامات سے سیکیورٹی فورسز کے کیمپ میں داخل ہونے کی کوشش کی لیکن فوجیوں کے بروقت جواب نے دہشت گردی کی کوشش ناکام بنا دی۔

بیان کے مطابق دہشت گرد فرار ہو گئے ہیں جبکہ ان کی ہلاکتوں کا پتہ لگایا جا رہا ہے۔

آئی ایس پی آر کے مطابق نوشکی میں دہشت گردوں نے ایف سی کیمپ میں گھسنے کی کوشش کی جس کا فوری جواب دیا گیا اور فائرنگ کے تبادلے میں 4 دہشت گرد مارے گئے۔

Source link

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں